اللہ کے سامنے رونے والے حضرات

بکھرے موتی
21
0

اللہ کے سامنے رونے والے حضرات

 میرے شیخ قطب الاقطاب حضرت مولانا محمد زکریا کاندھلوی نور اللہ مرقدہ وقدس سرہ فرماتے تھے کہ میں نے اپنے اکابر میں دو بزرگوں کو اخیر شب میں آواز سے روتے دیکھا ہے‘ ایک اپنے والد ماجد حضرت مولانا محمد یحییٰ صاحب کو اور دوسرے شیخ الاسلام حضرت مولانا حسین احمد مدنی کو یہ دونوں بزرگ اس طرح اللہ تعالیٰ کے سامنے روتے اور بلبلاتے جیسے کسی بچے کی پٹائی ہورہی ہو اور وہ رُو رہا ہو‘ لیکن دن کے وقت اور لوگوں سے ملتے وقت ہمیشہ مسکراتے رہتے تھے۔

اللہ کے بعض بندے ایسے ہیں جو واقعتا اللہ تعالیٰ کے سامانے رونے کا حق ادا کرتے ہیں‘ اللہ کے سامنے رونا اپنی عبدیت کا اظہار کرنا ہے‘ حضرت شیخ کے یہ الفاظ کہ “جس طرح بچے کی پٹائی کی جارہی ہو” بڑے عجیب الفاظ ہیں۔ 

Facebook Comments

Comments are closed.