اندھا دھند کمائی کرنا بھی حرام ہے

بکھرے موتی
14
0

اندھا دھند کمائی کرنا بھی حرام ہے

حضرت جی مولانا محمد یوسف (امیر تبلیغ) ایک بار بیان فرما رہے تھے جوش میں آگئے‘ فمرانے لگے تمہیں کس نے کہا تھا کمانے کو؟ کہ دکانیں کھولو اور روٹی کماؤ؟ تم نے غلط سمجھا کہ کمانا فرض ہے جس طرح تم اندھا دھند کماتے ہو یہ فرض نہیں بلکہ حرام ہے‘ پہلے کمانے کا ڈھنگ سیکھو‘ پھر روٹی کماؤ‘ حلال اور حرام جائز وناجائز کو پہچانو‘ پھر کماؤ۔ حلال اور حرام کی تم کو تمیز نہیں ‘ جائز اور ناجائز کی تم کو پرواہ نہیں‘ تو تمہارے لیے کمانا حلال ہی نہیں۔ کہتے ہو کہ کمانا فرض ہے۔ 

Facebook Comments

Comments are closed.